دیگر پوسٹس

تازہ ترین

ماحولیاتی آلودگی کے برے اثرات!!

کدھر ہیں ماحولیاتی آلودگی اور انڈسٹریز اینڈ کنزیومرز کے محکمے جو یہ سب کچھ دیکھتے ہوئے بھی خاموش تماشائی بنے ہوئے ہیں آبادی بیشک تیزی سے بڑھ رہی ہے اور اپنا گھر ہر کسی کی خواہش اور ضرورت ہے رہائشی منصوبوں کی مخالفت نہیں کرتا اور ہائی رائزنگ عمارتوں کی تعمیر کو ضروری سمجھتا ہوں تاہم ہائی رائزنگ عمارتوں کی تعمیر اور اس سے جڑے ہوئے ضروری لوازمات اور معیار پر سمجھوتہ نہیں ہونا چاہئے اور باقاعدگی سے ان ہائی رائزنگ عمارتوں کی تعمیر کے وقت نگرانی کی جانی چاہئے

متبادل پر سوچیں!! سدھیر احمد آفریدی کی تحریر

یہ بلکل سچی بات ہے کہ کوئی بھی مشکل...

بیوٹی پارلر میں کام کرنیوالی لڑکی جس کی پرورش خالہ نے کی اور زندگی بھائی لے لی

ذرائع کے مطابق مقتولہ کو بچپن میں اس کی خالہ نے گود لے لیا تھا اور بالغ ہونے تک وہ اپنی خالہ کے پاس رہتی تھی پھر وہ ایک ڈاکٹر کے ساتھ بطور نرس کام کرتی رہی اس دوران وہ بیرون ملک چلی گئی جہاں سے دو ہفتے قبل واپس آئی اور اپنے منہ بولے ماموں غلام مصطفیٰ ولد روشن خان سکنہ سجی کوٹ روڈ قلندرآباد کی وساطت سے گوجری چوک میں فلیٹ کرائے پر لے کر رہنے لگی ۔

فاٹا انضمام کے معاملے پر مشران کی سپریم کورٹ سے مداخلت کی اپیل

ضلع خیبر سے جبران شنواری بالجبر انضمام اور پولیس نظام...

مانسہرہ ، کمسن بچی کے قتل میں ملوث ملزمان کو 9 سال بعد موت و عمر قید کی سزا

آزادی ڈیسک


مانسہرہ کی ماڈل کورٹ نے کمسن بچی کے کیس میں ملوث ایک ملزم کو سزائے موت اور ایک کو عمر قید کی سزا سنائی ہے ۔

پولیس ترجمان کے مطابق 2014 میں مانسہرہ کے علاقے داتہ میں ملزم جلال اور ولید نے کمسن بچی کو قتل کیا اور بچی کی لاش کو کو چھپا دیا تھا ۔ بچی کے لواحقین کی رپورٹ پر تھانہ صدر ميں مقدمہ درج کر کے پولیس نے تفتیش کی

دوران تفتیش ملزمان نے اپنے جرم کا اعتراف کرتے ہوئے موقع واردات کی نشاندہی کی ۔ ملزمان کی نشاندہی پر پولیس نے بچی کی نعش برآمد کی ۔

چند سال قبل مقامی عدالت نے دونوں ملزمان کو عمر قید کی سزا دی ، فیصلہ کو پشاور ہائی کورٹ ایبٹ آباد بنچ میں چیلنج کیا گیا ۔تاہم عدالت عالیہ نے سزا کالعدم قرار دیتے ہوئے مقدمہ دوبارہ ایڈیشنل سیشن جج/ ماڈل کورٹ میں دوبارہ ٹرائل ہوا ۔

ماڈل کورٹ نے جرم ثابت ہونے پر ملزم جلال کو سزائے موت اور ولید کو عمر قید کی سزا سنائی ہے۔